Corona and Mental Health

کرونا وائرس اور ہماری ذہنی صحت

وبائی بحران کے باعث سب کچھ بند ہو جانے کی وجہ سے مسائل بلا شبہ بڑھ گئے ہیں۔ کرونا وائرس کے متعلق با خبر رہیں لیکن اس کو اپنے حواس پر سوار کر کے پریشان نہ ہوں۔ کرونا وائرس کا خوف بری طرح لوگوں کے دل و دماغ پہ چھا چکا ہے۔ اس عالمی وباء کے متعلق خبریں ان لوگوں کے لیے زیادہ خطرناک ثابت ہو سکتی ہیں۔ جو پہلے سے ہی کسذہنی اضطراب کا شکار ہیں۔

کرونا وائرس ایک خطرناک مرض ہے۔ جس سے بچنے کا بہترین طریقہ ایک دوسرے سے سماجی دُوری اختیار کرنے میں ہےتاکہ جلد سے جلد اس کا خاتمہ ہو سکے اور نظام زندگی معمول  پر آسکے۔

اس صورت حال میں یہ بات ممکن ہے کہ ذہنی دباؤ اور خوف کا شکار ہو سکتے ہیں۔ کیونکہ اس وباء کے خاتمے کی مدت طے شدہ نہیں۔ ہر کوئی اسی پریشانی میں ہے کہ آگے کیا ہو گا۔ نوجوان نسل اپنے مستقبل کے لیے پریشان اور بوڑھے اپنی صحت کے لیے اور معصوم بچے بھی اس وباء سے بچاؤکے لیے گھروں میں مقید ہیں۔

سب سے پہلے ڈاکٹروں کے بتائے ہوئے طریقوں پر عمل کریں اور اپنی صحت کا خیال رکھیں۔ مناسب غذا کا استعمال کریں اور ساتھ ساتھ ذہنی صحت کا بھی خیال رکھیں۔ ایسے مشاغل اپنائیے جن سے آپ کو ذہنی سکون ملے جیسا کہ پھول، پودے اگائیے۔ اگر آپ کا نقش و نگاری یا رنگ آمیری کا شوق ہے تو اسی سرگرمی سے اپنے وقت کو کارآمد بنائیے۔

انہی کتابوں کا مطالعہ کیجیے جس سے آپ کی معلومات میں اضافہ ہواور چھوٹے بچوں کو بھی سبق آموز کردار اور سوچ کے لیے مثبت ہوں۔

چھوٹے بچوں کو بھی سبق آموز کہانیوں کی کتابیں پڑھنے کے لیے دیجیے جو کہ ان کے کردار اور تربیتی نشوونما میں معاون ثابت ہوں۔اگر آپ میں لکھنے کی صلاحیت موجود ہے تو یہ آپ کے لیے بہترین موقع ہے۔ آپ وہ سب کچھ کر سکتے ہیں جو آپ روزمرہ کی مصروفیات کی وجہ سے نہیں کر سکے۔

پاکستان میں کرونا سے اموات کی شرح دو فی صد ہے۔جبکہ اٹھانوے فی صد وہ لوگ ہیں جو صحت یاب ہو رہے ہیں۔ آپ ان لوگوں کو دیکھیں جو صحت یاب ہو چکے ہیں۔ کیونکہ کرونا ہی موت کی وجہ نہیں ہے ۔ ایسے بھی لوگ آپ کے اردگرد موجود ہیں جو اس وائرس سے متاثر ہوئے اور پھر صحت یاب ہو کر ہنستی مسکراتی زندگی گزار رہے ہیں۔ بیشک حالات پریشان کن ہیں لیکن پریشان میں اُمید کی کرن پر نظر ڈالیے اور تصویر کامثبت رُخ دیکھیے تو اندھیری کے بعد سورج کا طلوع ہونا ایک حقیقت ہے۔

 

Author: Saba Naz (Psychologist)

One thought on “Corona and Mental Health

  • June 29, 2020 at 4:03 pm
    Permalink

    Ma sha ALLAH sister beautifully written.may ALLAH always bless you.

    Reply

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *